urdu hot stori

Post Reply
User avatar
rajsharma
Super member
Posts: 6124
Joined: 10 Oct 2014 07:07

urdu hot stori

Post by rajsharma » 22 Oct 2017 15:37


جیجو نے میری سیل توڑیجیجو نے میری سیل توڑیجیجو نے میری سیل توڑی


میں ابھی ہائی سکول کلاس میں ہوں مجھے اردو فنڈا سے تعلق رکھتے صرف سات ماہ ہوئے ہیں ، یہ سائٹ مجھے میری سب سے پکی سہیلی بارش نے بتائی تھی. ہم دونوں ایک دوسری کی ہمراز ہیں مجھے سب پتہ رہتا ہے کہ آج کل اس کا کتنے لڑکوں سے چکر ہے کس کس سے چدواتی ہے اور اس کو میرا سب کچھ معلوم رہتا ہے. ہم دونوں دوسری کلاس سے ایک ساتھ پڑھتی آ رہی ہیں ، تو دوستو ، جب اس نے مجھے اردو فنڈا ڈاٹ کام پر کہانی پڑھواي تو کہانی پڑھ کر میں مچل اٹھی اپنی چوت پھڑوانے کو!
ہم دونوں اس کے گھر بیٹھیں تھی اس نے مجھے اپنی بانہوں میں لے کر میرے ہونٹ چومے اور پھر میرے ممے دبانے لگی. اس وقت میری چوت کنواری تھی لیکن اس کی نہیں کیوں کہ اسنے تو نووي کلاس میں ہی لوڑے کا ذائقہ چکھ لیا تھا. اس نے مجھے چوما -- چا ٹا ، انگلی سے میرے دانے کو چھیڑ چھیڑ کرسخت کر دیا. اس کے بعد میں روز گھر میں بیٹھ نیٹ پر کہانیاں پڑھتی.
جیسے میں نے اوپر لکھا کہ کس طرح اپنی سہیلی کے ساتھ میں لسبین سیکس کا مزا لے لیتی تھی پر مجھے لڑکوں سے چکر چلانے سے حجاب سا تھا اس لیے جب دانا کودنے لگتا تو میں واشروم میں جاکر سلوار کا ناڑا کھول انگلش سیٹ پر ٹانگیں چوڑی کرکے بیٹھ جاتی اور اوںگلی گیلی کر کر کے دانے کو رگڑ خود کو پرسکون کر لیتی. اوںگلی کرتے وقت میں آنکھوں کے سامنے لڑکوں کے لوڑے کا تصور کرتی. بورڈ کے پیپر تھے اور پیپر کروانے کے لئے میری سہیلی نے تو سینٹر کے سپرواذر سے باہر ہی باہر ہی کھچڑی پکا لی تھی اور دونوں نے پیپر اچھے دیے. اس کے بعد ہم فری تھی.
تبھی مجھے ماں نے کہا -- تیری آپی پیٹ سے ہے اور اب اس کی تاریخ بھی نزدیک آتی جا رہی ہے ، ادھر سمدھن جی کی گھٹنوں کی تکلیف بڑھ رہی ہے ، بے چاری اکیلی کیا -- کیا کرے گی ، تو ایسا کر کہ جتنے دن فری ہے ، دیدی کے گھر چلی جا!
میں پہلے بھی کبھی -- کبھی وہاں رک لیتی تھی لیکن اب میں اس اسٹیج میں تھی جہاں اب مجھے جانا تھوڑا عجیب سا لگتا تھا. لیکن مجھے جانا پڑا ، میں نے وہاں من بھی لگا لیا. جیجو کے ساتھ کافی میں گھلمل گئی تھی.
میری چھاتی عمر کے حساب سے کافی بڑی ، گول اور دلکش تھی.
میں بھی گھر کے کام میں مدد کرنے لگی.
ایک روز دیدی کی ساس -- سسر اپنے جددي گاؤں میں زمین کے چکر میں گئے اور وہیں رک گئے.
اس دن جیجو کے گھر آئے اور ہمیں بولے -- چلو آج گھوم کر آتے ہیں ، وہیں سے کھانا پیک کروا لیں گے!
دیدی بولی -- نہیں آصف ! میں رسک نہیں لینا چاہتی! بہت نازک وقت ہے.
جیجو بولے -- چل نہ جان! نیا کے. ایف . سی کھلا ہے! سنا ہے برگر اور پذا بہت کمال کا ملتا ہے!
دیدی بولی -- سدرہ ، تم چلی جاؤ!
میں بولی -- نہیں دیدی! آپ کے بغیر؟
آج نہ جانے جیجو کا دھیان میری چھاتی پر تھا کیوںک میرا قمیض گہرے گلے کا تھا اور تھوڑا جاليدار بھی تھا اور نیچے کالی برا صاف دکھ رہی تھی.
نہیں تم جاؤ! دیدی بولی -- تب تک میں بیٹھ کر سبق کروں گی! آنے والے بچے کے لئے اچھا ہوتا ہے!
اچھا میں ابھی کپڑے تبدیل کر کے آئی!
ٹھیک ہے! میں کار نکال لوں!
میں کمرے میں چلی گئی ، جیجو باہر والے دروازے سے کمرے میں آئے اور بولے -- رہنے دو نا! اس میں کون سی کم لگ رہی ہو!
اچھا جی کیا خاص ہے اس میں؟
جیجو بولے -- اس میں سے تیری جوانی صاف صاف دکھتی ہے!
کیسی جوانی؟
میری طرف سے عام برتاؤ دیکھ جیجو بولے -- تمہاری چھاتی! گورا بدن!
جاؤ آپ! اب میں کپڑے بدل لوں!
رہنے دو نا! ایسے ہی چلو!
ہٹو! دیدی نے دیکھ لیا تو خیر نہیں ہوگی میری اور آپ کی!
اوہ سالی صاحبہ ! بدل لو کپڑے!
آپ جاؤ!
میرے سامنے کر لو نا! کیوں شرماتي ہو؟ اپنے بوواے فرینڈ کے سامنے نہیں اتارتی ہو کیا؟
ہٹو جیجو! آپ بھی نا!
تیری ساری خبر رکھتا ہوں!
کیا خبر ہے میری؟
چلو بدل لو نا! جیجو میرے پاس آئے ، پیچھے سے مجھے اپنی بانہوں میں لے کر میری گردن پر اپنے ہونٹ رکھ دیے.
(یہ لڑکی کو گرم کرنے کا سب سے اہم جگہ ہوتی ہے)
یہ سب کیا جیجو؟
کیا کروں! تم تو رحم کرو اس غریب پر! تیری دیدی کا آج کل ریڈ سگنل ہے! اوپر سے جس دن سے آئی ہو اس بار ، تیرے تبدیلی دیکھ کر روک نہیں پا رہا ہوں اپنے آپ کو!
اب جاؤ جیجو! اس وقت وقت اور جگہ صحیح نہیں ہے!
جیجو نے بغیر کہے میری قمیض اتار دی اور برا کے اوپر سے میرے ممے دبانے لگے. میری آگ بڑھنے لگی. میں ان سے لپٹنے لگی ، ان کا لؤڑا کھڑا ہونے لگا تھا. میں جھٹکے سے ان کی بانہوں سے نکلی ، کپڑے اٹھائے اور باتھ روم میں گھس کر كڈي لگا لی. جیجو اب باہر رہ کر انتظار کر رہے تھے.
بہت خوبصورت بن کر آئی ہو سالی ساهبا؟
ہاں ، جب جیجا کا دل آ گیا ہے تو میرا بھی کچھ فرض ہے!
ہائے میری جان!
جیجو نے کار سٹی کے بجائے بائی پاس کی طرف موڑ لی.
جیجو کہاں جا رہے ہیں؟
سویٹ ہارٹ! فارم ہاؤس جا رہے ہیں!
جیجو وہاں کیوں؟
بےشرمو کی طرح بولے -- تیری جوانی مسلنے! تجھے اپنی بنانے کے لئے!
لیکن کھانا؟
بولے -- روكو!
انہوں نے موبائل لگایا -- برجواسي کارنر سے بول رہے ہو؟ پلیز ایک دال مكھني ، كڑاهي پنیر ، مكس وےجي ٹیبل ، بٹر -- نان ٹھیک ایک گھنٹے بعد تیار کروانا! ابھی نہیں!
لو بےغم ساهبا! آپ کا کھانا!
جیجو نے میرا ہاتھ پکڑ لیا ، سہلانے لگے اور ایک دم سے شیطانی سے میرا ایک چوچی دبا دی ، میرا ہاتھ پکڑ اپنے لوڑے پر رکھ دیا. میرا ہاتھ خود -- ب -- خود چلنے لگا.
اب آئی نا لائن پر سالی ساهبا!
جیجو ، کیا یہ سب ٹھیک ہے؟ ہم دونوں جوانی کے نشے میں دیدی کو بھول رہے ہیں! دونوں دھوکہ دے رہے ہیں دیدی کو!
کیا کروں؟ بہت پیاسا ہوں! میں تیرے اوپر پہلے سے فدا تھا!
اتنے میں ہم فارم ہاؤس پہنچ گئے. چوکیدار نے سليوٹ مارا ، ایک لڑکا آیا اور کار کا دروازہ کھولا.
ہم کمرے میں پہنچے. اسی وقت دو مگ ، ٹھنڈی بیئر ، برف میز پر تھی ، ساتھ میں كركرے کا پےكٹ تھا.
جیجو بولے -- آؤ بیئر لو!
نہیں جیجو! کبھی نہیں پی!
جان تھوڑی سی پی!
مکمل مگ پلوا دیا ، خود اتنے میں دو -- تین مگ کھینچ گئے. مجھے اتنا کافی تھا ، جیجو نے وہیں بیٹھے بیٹھے ہی مجھے اٹھا لیا بانہوں میں اور عالی شان بیڈروم میں لے گئے. كھشبودار کمرہ تھا ، جیجو نے پہلے میرا پسندیدہ میں اتارا ، پھر میری جینز اتاری. ساتھ ساتھ میرے ہونٹ بھی چومتے رہے. میں نشے میں تھی ، اتنے میں انہوں نے مجھے ایک مگ بیئر اور پلا دیا. میں خود جیجو سے لپٹنے لگی ، ان کی شرٹ اتاری ، پھر ان کی جینز کا بٹن کھولا اور نیچے سرکا دی. بہت سیکسی پھرےچي پہنی تھی جیجو نے ، جس میں ان کا لؤڑا کافی بڑا لگ رہا تھا.
سہلاؤ نا! وقت کم ہے نا!
انہوں نے براہ راست 69 پر آتے ہوئے اپنا لؤڑا چسوايا اور میری چوت چاٹي.
مجھے بہت مزا آیا. انہوں نے میری ٹانگیں پھیلائی اور بیچ میں آکر بیٹھ گئے اور اپنا لؤڑا چوت پر ٹکا کر بولے -- اس کو ذرا صحیح جگہ پکڑ کر رکھنا!
انہوں نے مجھے مکمل جکڑ لیا. جیسے ہی چوٹ ماری ، میری ہچکی نکل گئی ، سانس اٹک گئی. آنکھوں میں آنسو تھے ، آواز نکل نہیں رہی تھی.
ایک اور جھٹکا لگا اور مکمل لؤڑا میری چوت کی تنگ دیواروں میں پھنس چکا تھا.
چھوڑ دو جیجو!
بولے -- بس بس!
جیجو نے مکمل لؤڑا باہر نکال لیا. ان کے لوڑے کو خون سے بھیگا دیکھ کر میں رونے لگی. انہوں نے صاف کیا اور پھر سے اندر دھکیل دیا.
اس بار درد کم تھا لیکن پہلی بار کی ٹيسے نکل رہی تھی. لیکن درد کچھ کم تھا. پھر تو آرام سے دیواروں کو رگڑتا ہوا اندر باہر ہونے لگا. ایک دم سے مجھے خوشی ملا -- گویا آسمان ملا! ہوش كھويے! دل کر رہا تھا کہ جیجو کبھی باہر نہ نکالیں!
جیجو مجا آ رہا ہے! اور کرو نا!
جیجو نے میرے مممو کو پیتے ہوئے تیز دھکے مارے اور پھر کچھ دیر کے طوفان کے بعد کمرے میں سناٹا چھ گیا ، صرف ساسے تھی ، سسکی کی آوازیں تھی.
جیجو مجھے چومنے لگے ، بولے -- بہت مزہ دیا ہے تونے!
مجھے بھی اچھا لگا جیجو!
اس کے بعد میں وہاں ایک مہینہ رکی اور جب موقع ملتا ہم ایک ہو جاتے.
تو دوستو ، جیجو نے میری سیل توڑ دی.
جب میں واپس آئی تو میں نے لڑکوں کو ہاں كهني شروع کی
کمینٹ میں فوٹو دینا والے کو بلاک کیا جایا گا.
شکریہ
साधू सा आलाप कर लेता हूँ ,
मंदिर जाकर जाप भी कर लेता हूँ ..
मानव से देव ना बन जाऊं कहीं,,,,
बस यही सोचकर थोडा सा पाप भी कर लेता हूँ
(¨`·.·´¨) Always
`·.¸(¨`·.·´¨) Keep Loving &
(¨`·.·´¨)¸.·´ Keep Smiling !
`·.¸.·´ -- raj sharma

urdu hot stori

Sponsor

Sponsor
 

Post Reply